پنجاب فوڈ اتھارٹی کا کریک ڈاؤن ، بغیر لائسنس کام کرنے والی غوری سوڈا فیکٹری سیل۔ ایف این این آئی

پنجاب, صحت

مضر صحت کیمیکل سے تیار کردہ 8 ہزار لیٹر خام مال، 2 ہزار بوتلیں اور مشینری ضبط
ناقص سوڈا کی بوتلیں بھر کے لاہور اور دیگر شہروں میں سپلائی کی جا رہی تھی۔ ڈایریکٹر آپریشنزرافیعہ حیدر لاہور (ایف این این آئی) پنجاب فوڈ اتھارٹی نے غیر معیاری اور مضر صحت اشیاء بنانے اور بیچنے والوں کے خلاف کریک ڈاؤن کرتے ہوئے شہر کے مختلف علاقوں میں واقع پروڈکشن یونٹس، ہوٹلوں اور ریستورانوں کو چیک کیا۔ پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ٹیم نے سمن آباد کے علاوے میں واقع میں غوری سوڈا فیکٹری پر چھاپہ مارا اور بغیر لائسنس کام کرنے پر سیل کر دیا۔ ڈایریکٹر آپریشنز رافیعہ حیدر نے تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ سوڈا فیکٹری بغیر لائسنس کام کرنے والی فیکٹری میں سوڈا کی بوتلیں بھر کے لاہور اور دیگر شہروں میں سپلائی کی جا رہی تھی۔ سوڈے کی تیاری میں مضر صحت کیمیکل استعمال کیے جا رہے تھے۔ موقع پر کیے گئے ٹیسٹوں کے مطابق سوڈا واٹر میں کیمیکل اور انسانی استعمال کے لیے نقصان دہ اجزاء ثات ہوئے۔ غوری سوڈا واٹر فیکٹری کو سیل کر کے 8 ہزار لیٹر خام مال، 2 ہزار بوتلیں اور مشینری ضبط کر لی گئی ہے۔رافیعہ حیدر کا مزید کہنا تھا کہ گرمی آتے ہی ناقص بوتلوں اور سوڈا واٹر کا کاروبار بڑھ جاتا ہے جو عوام بالخصوص بچوں کی صحت پر انہائی مضر اثرات ڈالتا ہے۔ اس حوالے سے پنجاب فوڈ اتھارٹی کی اپیل ہے کہ ناقص بوتلوں کی فروخت کرنے والوں کے متعلق اطلاع دے کر اپنا فرض نبھائیں اور ایسے عناصر کے خاتمے میں پنجاب فوڈاتھارٹی کی مدد کریں۔ علاوہ ازیں فرائی چکس ، جین مندر شاخ کو ناقص صفائی اور مضر صحت اجزاء کے استعمال پر جرمانہ کیا گیا۔ فرائی چکس کو جرمانے کے ساتھ وارننگ نوٹس بھی جاری کیا گیا ہے۔دی گئی ہدایات کے مطابق بہتری نا لانے پر ریستوران کو سیل کر دیا جائے گا۔

Leave a Reply