78

سحر و افطار کے اوقات میں کسی قسم کی لوڈ شیدنگ نہیں ہو گی گھریلو صارفین کو مکمل ریلیف دیا جائے گا: باسط زمان ۔ ایف این این آئی

راولپنڈی ( ایف این این آئی) سحر و افطار کے اوقات میں کسی قسم کی لوڈ شیدنگ نہیں ہو گی گھریلو صارفین کو مکمل ریلیف دیا جائے گا انڈسٹری کو شام ساڑھے چھ بجے سے لے کر رات ساڑھے تین بجے تک لوڈ شیڈنگ کا سامنا کرنا پڑے گا صارفین روشنی ایس ایم ایس کی سروس لیں اور ضروری مرمت اور اپ ڈیٹس کے لیے فوری معلومات حاصل کر سکتے ہیں ان خیالا ت کا اظہار آئیسکو کے چیف ایگزیکٹو باسط زمان نے راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری کے قائم مقام صدر خواجہ راشد وائیں سے ملاقات کی اس موقع پر تاجروں کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ روات فیڈر پر لوڈ مینجمنٹ کے حوالے سے شکایا ت دور کی جا رہی ہیںٹرپنگ کی شکایا ت بہت کم ہو چکی ہیں انڈسٹری کو پچھلے سال کے مقابلے میں کم لوڈشیڈنگ کا سامنا ہو گاراولپنڈی کے پرانے بازاروں اور مارکیٹوں میں خستہ اور پرانی بجلی کی تاروں کی تبدیلی کا ایک جامع پروگرام موجود ہے رمضان المبارک کے بعد مرحلہ وار تمام پرانی تاریں تبدیل کی جائیں گی گرین انرجی کے فروغ کے لیے نیٹ میٹرنگ کا نظام پر تیزی سے جاری ہے یہ سہولت گھریلو اور صنعتی صارفین دونوں کے لیے ہے اس موقع پر اپنے خطاب میں قائم مقام صدر راشد وائیں نے کہا کہ رمضان میں کمرشل صارفین اور مارکیٹوں میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ نہ کی جائے سٹریٹ لائٹس ایل ای ڈی پر منتقل کرنے کے لیے متعلقہ شعبوں سے مل کر ایک جامع حکمت عملی اختیار کرے سمارٹ اور ماحول دوست انرجی کے لیے صارفین کو مراعات دی جائیں ٹرانسمشن لائنز کو بہتر بنایا جائے اور لوڈ منیجمنٹ کے لیے فیڈرز علیحدہ کیے جائیں تاکہ گھریلو صارفین کو ریلیف ملے
اس موقع پر نائب صدر عاصم ملک، مجلس عاملہ کے اراکین اور چیمبر ممبران بھی موجود تھے
تصویر کیپشن
آئیسکو چیف ایگزیکٹو باسط زمان راولپنڈی چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹری میں تاجروں کے اجلاس سے خطاب کر رہے ہیں
راولپنڈی چیمبر آف کامرس قائم مقام صدر خواجہ راشد وائیں آئیسکو چیف ایگزیکٹو باسط زمان کو دورہ چیمبر کے موقع پر شیلڈ دے رہے ہیں

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں